آؤ کچھ دیر دسمبر کی دھوپ میں بیٹھیں

December Shayari

آؤ کچھ دیر دسمبر کی دھوپ میں بیٹھیں

آؤ کچھ دیر دسمبر کی دھوپ میں بیٹھیں

یہ فرصتیں ہمیں شاید نہ اگلے سال ملیں

Comments